19

امیدوں اور خوش فہمیوں کے محل دھڑام سے زمین بوس ہو گئے ۔۔۔۔ عمران خان کی سابقہ اہلیہ جمائما خان راتوں رات انکے خلاف کیوں ہو گئیں ؟ ایک اور خبر آ گئی

” >
لندن(ویب ڈیسک) سپریم کورٹ کی جانب سے توہین رسالت کیس میں بری ہونے والی آسیہ مسیح کی رہائی کے بارے وزیراعظم عمران خان کی سابق اہلیہ جمائمہ گولڈ سمتھ نے تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ عدالت سے بَری آسیہ بی بی کو ملک چھوڑنے کی اجازت نہیں دی جارہی،

آسیہ کو ملک سے جانے نہ دینا اس کے ڈیتھ وارنٹ پر دستخط کرنا ہے۔تفصیلات کے مطابق سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر کا سہارا لیتے ہوئے جمائمہ گولڈ سمتھ کا کہنا تھا کہ یہ وہ نیا پاکستان نہیں جس کی ہمیں امید تھی، عدلیہ کے دفاع میں بڑی دلیرانہ تقریر کی گئی تھی۔ تقریر کے 3 دن بعد ہی حکومت مطالبات کے سامنے جھک گئی۔ تاہم انہوں نے یہ بھی کہا کہ اب بھی امید ہے حکومت ایسا کچھ سوچ رہی ہو گی جو ہم نہیں جانتے۔دوسری جانب ایک خبر کے مطابق وزیر اعظم عمران خان کی سابقہ اہلیہ جمائمہ گولڈ سمتھ کا کہنا ہے کہ عدالت سے بَری آسیہ بی بی کو ملک چھوڑ نے کی اجازت نہیں دی جارہی، آسیہ کو ملک سے جانے نہ دینا اس کے ڈیتھ وارنٹ پر دستخط کرنا ہے۔سوشل میڈیا کے ایک پیغام میں جمائما گولڈ اسمتھ نے عمران کی تقریر کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ تقریر کے 3 دن بعد ہی حکومت مطالبات کے سامنے جھک گئی۔عدلیہ کے دفاع میں بڑی دلیرانہ تقریر کی گئی تھی، یہ وہ نیا پاکستان نہیں جس کی ہمیں امید تھی تاہم انہوں نے یہ بھی کہا کہ اب بھی امید ہے حکومت ایسا کچھ سوچ رہی ہو گی جو ہم نہیں جانتے۔واضح رہے کہ کچھ روز قبل سپریم کورٹ نے آسیہ بی بی کوسزا موت سے بری کر دیا تھا جس کے بعد پورے ملک میںحالات کشیدہ ہو گئے تھے اور تحریک لبیک پاکستان نے ملک گیر احتجاج کیا تھا جس پروفاقی حکومت اور اسلام آباد میں ہونے والے تحریک لبیک کے دھرنے کے مظاہرین کے مابین پانچ نکاتی معاہدہ ہو ا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں