10 سالہ کرپشن کی تحقیقات کیلئے انکوائری کمیشن ۔۔۔ عمران خان کس دبنگ شخصیت کو کمیشن کا سربراہ بنانے والے ہیں ؟ نام سامنے آگیا

" >

لاہور(ویب ڈیسک)وزیراعظم عمران خان نے گزشتہ روز قوم سے خطاب میں انکوائری کمیشن بنانے کا اعلان کیا تھا۔ انکوائری کمیشن گزشتہ دس سال میں لئے گئے قرضوں کی تحقیقات کرے گا۔دنیا نیوز ذرائع کے مطابق ماضی میں آئی جی سمیت مختلف عہدوں پر تعینات رہنے والے شعیب سڈل کو انکوائری کمیشن کا

سربراہ بنانے کا امکان ظاہر کیا جا رہا ہے۔شعیب سڈل کی سربراہی میں یہ انکوائری کمیشن گزشتہ دس سال میں لئے گئے قرضوں کی تحقیقات کرے گا۔ خیال رہے کہ انکوائری کمیشن کے قیام کا اعلان گزشتہ روز وزیراعظم عمران خان نے کیا تھا۔ شعیب سڈل اس سے قبل مختلف عہدوں پر رہ تعینات چکے ہیں اور وائٹ کالر کرائم کی تحقیقات کےبھی ماہر مانے جاتے ہیں۔ دوسری جانب یہ خبر ہے کہ وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت کمیشن آف انکوائری سے متعلق اہم اجلاس ہوا جس میں کمیشن کیلئے ضابطہ کار (ٹی او آرز) کے مسودے پر غور کیا گیا، وزیراعظم ہاؤس کی جانب سے جاری اعلامیے کے مطابق کمیشن آف انکوائری، پاکستان کمیشن آف انکوائری ایکٹ 2017 کے تحت قائم کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے جس میں انٹر سروسز انٹیلی جنس (آئی ایس آئی)، ملٹری انٹیلی جنس (ایم آئی)، انٹیلی جنس بیورو (آئی بی) کے سینیئر افسران شامل ہوں گے، اعلامیے کے مطابق کمیشن آف انکوائری میں سیکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن آف پاکستان (ایس ای سی پی)، آڈیٹرجنرل آفس اور فیڈرل انویسٹی گیشن ایجنسی (ایف آئی اے) کے سینیئر افسر بھی شامل ہوں گے۔اعلامیے کے مطابق انکوائری کمیشن تحقیقات کرے گا کہ 2008 سے2018 تک قرضے 24 ہزار ارب تک کیسے بڑھے، کمیشن رقم خرچ کرنے والے متعلقہ وزراء سمیت تمام وزارتوں اور ڈویژنز کا بھی جائزہ لے گا۔ اور اب یہ خبر ہے کہ دنیا نیوز ذرائع کے مطابق ماضی میں آئی جی سمیت مختلف عہدوں پر تعینات رہنے والے شعیب سڈل کو انکوائری کمیشن کا سربراہ بنانے کا امکان ظاہر کیا جا رہا ہے۔